30

افغان حکومت کا کارنامہ،برف میں پھنسے افراد کی امداد کیلئے پنکھے بھیج دیئے

پاکستان سمیت دنیا کے تمام برفانی علاقوں میں جب حد سے زیادہ برفباری ہوجائے اور ہر قسم کے زمینی راستے بند ہو جائیں اور اس کے نتیجے میں کوئی نقصان ہوجائے تو سرکاری اور غیر سرکاری اداروں کی جانب سے امداد فراہم کی جاتی ہے جبکہ برف میں پھنسے لوگوں کو زمینی یا فضائی مدد پہنچائی جاتی ہے۔
امداد میں اشیائے خورونوش گرم کپڑے، کمبل شامل ہوتے ہیں۔ اشیائے خورونوش اس لیے کہ جب برفباری سے راستے بند ہوجاتے ہیں تو علاقے میں غذائی قلت پیدا ہوجاتی ہے جبکہ گرم کپڑے اور کمبل متاثرہ علاقے کے لوگوں کو سردی سے نمٹنے میں کام آتے ہیں۔

جب برفانی تودے یا گلیشیئر آجائے جس کے نتیجے میں آبادی کو نقصان پہنچے تو متاثرین کو متبادل رہائش فراہم کی جاتی ہے یا ان کو ریکسیو کرکے محفوظ علاقوں میں منتقل کیا جاتا ہے۔

یہ بھی پڑھیں: برف میں مخالفین کے ساتھ تصویریں بنانے کا آئیڈیا کس کا تھا؟

لیکن افغانستان کے صوبہ نورستان میں حالیہ دنوں ہونے والی شدید برفباری کے متاثرین کی افغان حکومت نے ’مضحکہ خیز‘ مدد کی ہے۔

نورستان افغانستان کا مغربی اور پسماندہ صوبہ ہے جہاں بنیادی سہولیات بھی ناپید ہیں اور یہاں سردیوں میں شدید برفباری ہوتی ہے۔

گزشتہ روز شدید برفباری کے نتیجے میں یہاں گھر زمین بوس ہوئے۔ درجنوں خاندان بے گھر ہوگئے۔ شدید سردی اور برفباری میں کھلے آسمان تلے رہنے پر مجبور ہوگئے، جس پر افغان حکومت نے یہاں ہنگامی امداد بھیجنے کا فیصلہ کیا۔

جب یہ امداد نورستان پہنچی اور متاثرین میں تقسیم ہونے کا مرحلہ آیا تو امدادی سامان دیکھ کر علاقہ مکین خوش ہونے کے بجائے مایوسی کا شکار ہوگئے کیوں کہ اس میں گرم کپڑے اور اشیائے خورونوش کے بجائے سولر سسٹم سے چلنے والے پنکھے موجود تھے۔

سوشل میڈیا پر افغان حکومت کے اس ’مضحکہ خیز‘ امداد کو تنقید کا نشانہ بنایا جارہا ہے۔

Facebook Comments

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں