51

سعودی ولی عہد محمد بن سلمان کا دورہ پاکستان پر مثالی سیکیورٹی پلان ترتیب، 1 ہزار سے زائد چیک پوسٹیں، میٹرو سروس، آئیربیس، موبائل سروس، فیض آباد سمیت اسلام آباد کے تمام داخلی انٹرچینج بند

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) ان دنوں پاکستان عالیمی میڈیا سمیت تمام عالم کی نظریں پاکستان پر ہیں، کیونہ سعودی ولی عہد محمد بن سلمان کی آمد کیلئے پولیس کے اعلیٰ حکام نے مثالی سکیورٹی پلان ترتیب دے دیا ۔ جڑواں شہروں میں پولیس اور رینجرز کی 1000 سے زائد چیک پوسٹیں قائم کی جائینگی ، موبائل سروس اور میٹرو بھی 2 دن تک معطل رہیں گی ، پولیس اور رینجرز کے 2 ہزار سے زائد جوانوں کو سکیورٹی کیلئے تعینات کیاجائیگا۔ فیض آباد سمیت اسلام آباد داخل ہونے والی تمام انٹرچینجز کوبھی بند کیا جائیگا ۔ تفصیلات کے مطابق سعودی ولی عہد محمد بن سلمان کی پاکستان میں 2 روزہ دورے کیلئے سکیورٹی

اقدامات پر سکیورٹی اداروں اور سفارتخانے کا مشترکہ اجلاس ہوا جس میں پولیس کے اعلیٰ حکام نے ولی عہد کی آمد کے موقع پر مثالی سکیورٹی پلان پر بریفنگ دیتے ہوئے بتایا کہ راولپنڈی اسلام آباد میں رینجرز اور پولیس کی مشترکہ ایک ہزار چیک پوسٹیں قائم کی جائینگی جبکہ دونوں شہروں میں ہیوی ٹریفک کا داخلہ بھی بند رہے گا ڈرون یا اس جیسے کھلونے نما ہیلی کاپٹرز اور کواڈ کیپٹرز کو ہوا میں دیکھتے ہی گولی مارنے کا حکم دیا گیا ہے 2 دن تک ایئربیس بھی بند رہیں گی جڑواں شہروں کے اہم مقامات پر رینجرز کے اہلکار اور ماہر سنائپرز تعینات رہیں گے اس کے علاوہ جڑواں شہروں میں مخصوص جگہوں پر موبائل سروسز اور میٹرو معطل رکھی جائے گی دو ہزار سے زائد سکیورٹی اہلکار محمد بن سلمان کی سکیورٹی کے فرائض سرانجام دینگے ریڈ زون کو بھی مکمل طور پر سیل کیاجائیگا جبکہ فیض آباد سمیت اسلام آباد داخل ہونے والی تمام انٹر چینجز کو بھی بند رکھا جائے گا۔پاکستان میں‌مثالی سیکیورٹی پلان دیکھنے کو مل رہا ہے.

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں