107

ڈیرہ اسماعیل خان میں جے یو آئی کا تحفظ ناموس رسالت ملین مارچ ڈیرہ شہر کی عوام کے لٸے عذاب بن گیا,

ڈیرہ اسماعیل خان (ڈیرہ)جے یو آئی کا تحفظ ناموس رسالت ملین مارچ ڈیرہ شہر کی عوام کے لٸے عذاب بن گیا,فوارہ چوک سے لیکر توپانوالہ چوک تک روڈ ہر قسم کی ٹریفل کے لٸے بند, جمعیت کے ڈنڈا برادر فورس نے شہریوں کو ذلیل وخوار کردیا, توپانوالہ چوک سے جی او چوک تک روڈ کی بندش سے ہسپتال کیلٸے جانے والے مریضوں کی شدید مشکلات ,شہریوں کو اپنوں گھروں میں جانے کیلٸے دشواری کا سامنا. تفصیلات کے مطابق جمعیت علمائے اسلام کے زیر اہتمام ڈیرہ میں ہونیوالے تحفظ ناموس رسالت ملین مارچ کیلئے شہر کے مصروف ترین چوک توپانوالہ والا پر آج میدان سجے گا جس کیلئے انتظامیہ کی جانب سے سیکورٹی خدشات کے نام پر فوارہ چوک سے جی پی او تک تمام تجارتی مراکز بند رکھنے کی ہدایت کی گئی ہے جبکہ مذکورہ اہم ترین سڑک ہر قسم کی ٹریفک کیلئے بھی بند رہے گی, ادھر ہفتہ کی شام سڑک پر سٹیج کی تیاری اور دیگر انتظامات کے نام پر توپانوالہ چوک سے جی پی او موڑ تکسڑک کو دونوں اطراف یر قسم کی ٹریفک کیلئے بند کردیا گیا جس سے نہ صرف شہریوں کو دوکانوں سے گھر جانے میں شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑا وہیں ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر کو جانے کے راستے بند ہونے کی وجہ سے ہسہتال جانیوالے مریضوں اور دیگر شہریوں کو پریشانی کا سامنا کرنا پڑ رہاہے اور شہر میں شدید ٹریفک جام کی صورتحال ہے, دوسری جانب شہری حلقوں اور دیہاڑی دار مزدوروں نے راستوں کی بندش کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ اسلام کی سربلندی اور تحفظ ناموس رسالت کا نعرہ لگانیوالے امت محمدی اور دیگر لوگوں کو تکلیف پہنچا کر کیا پیغام دینا چاہتے ہیں جبکہ دھرنوں کے نام پر سڑکوں کی بندش اور احتجاج پر تنقید کرنیوالے اپنے ان اقدامات کا کیا جواز پیش کرینگے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں