79

سود خوروں اور منشیات فروشوں کیخلاف سخت کاروائی عمل میں لائی جائیگی، محمدعارف ڈی پی او ٹانک کی گل امام میں کھلی کچہری سے خطاب

جرائم کے خاتمہ کے لئے عوامی تعاون ناگزیر ہے جرائم پیشہ عناصر کا قلع قمع کرنے کے لئے پولیس کسی بھی قربانی سے دریغ نہیں کریگی سود اور منشیات فروشی کی لعنت معاشرے کو دیمک کی طرح چاٹ رہے ہیں جس کے خلاف ہم سب کو ملکر اپنا کردار ادا کرنا ہوگا سود کی روک تھام کے لئے قانون سازی کی گئی ہے اس لئے شہری سود کے کاروبار میں ملوث افراد کی نشادہی کریں پولیس ان کے خلاف سخت قانونی کاروائی عمل میں لائے گی ان خیالات کا اظہار ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر محمد عارف خان نے نواحی گاؤں گل امام میں منعقدہ کھلی کچہری سے خطاب کرتے ہوئے کیا کھلی کچری میں علاقہ معززین اور شہریوں کی کثیر تعداد نے شرکت کی اس موقع پر ڈی ایس پی رورل شاہد عدنان اور ایس ایچ او گل امام انسپکٹر نقیب اللہ خان بھی موجود تھے ڈی پی او کا کہنا تھا کہ آئی جی پولیس صلاح الدین محسود کی ہدایات پر کھلی کچہریوں کے انعقاد کو ممکن بنایا جا رہا ہے تاکہ پولیس کے حوالے سے شکایات کا ازالہ عوام کی دہلیز پر کیاجا سکے پولیس کا بنیادی کام عوام کی خدمت کرنا اور مظلوم طبقہ کی داد رسی کرنا ہے جرائم کا خاتمہ تب ممکن ہو سکے گا جب پولیس عوام کے ساتھ تعاون کریگی کیونکہ عوامی تعاون کے بغیر جرائم کی روک تھام ممکن نہیں انہوں نے کہا کہ ان پولیس اہلکاروں اور افسران کے ساتھ سختی سے نمٹا جائیگا جو جرائم پیشہ عناصر کے ساتھ تعلق رکھتے ہیں عوامی شکایات کے حل کے لئے ضلعی پولیس آفس میں شکایتی سیل قائم کر دیا گیا ہے جسکا سربراہ ایس پی رینک کاآفیسر ہے جہاں پر شہری پولیس کے خلاف اپنی شکایات درج کروا سکتے ہیں پولیس میں کرپٹ اہلکاروں کے لئے کوئی جگہ نہیں ہے انہوں نے کہا کہ علاقہ میں امن و امان کو برقرار رکھنے کے لئے سماج دشمن عناصر کے ساتھ آہنی ہاتھوں سے نمٹا جائیگا علاقہ میں منشیات فروشی ،قحبہ خانوں اور سود کے کاروبار کو کسی بھی صورت میں برداشت نہیں کیا جائیگا کھلی کچریوں میں عوام کی طرف سے پولیس کے خلاف کی جانیوالی شکایات کا ازالہ کیا جائیگا اس موقع پر معززین علاقہ نے پولیس کے حوالے سے درپیش مسائل کو اجاگر کیا جس پر ضلعی پولیس سربراہ نے بعض مسائل کے فوری حل کے لئے موقع پر احکامات جاری کئے شہریوں نے کھلی کچہری کو خوش آئنداقدام قرار دیا ۔۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں