130

اداکارہ روحی بانو استنبول میں انتقال کر گئیں،

پاکستان ڈرامہ انڈسٹری کا ایک عہد اپنے اختتام کو پہنچا، ماضی کی معروف ترین پاکستانی اداکارہ روحی بانو ترکی کے شہر استنبول میں چل بسیں۔

روحی بانو 3 جنوری سے استنبول کے اسپتال میں زیرعلاج تھیں۔ روحی بانو کے بھانجے انہیں پاکستان سے ترکی لے کر گئے تھے۔

ایک وقت تھا کہ پاکستان ڈرامہ انڈسٹری میں روحی بانو کا طوطی بولتا تھا، ان کی منجھی ہوئی اداکاری ناظرین کو بےحد بھاتی تھی ۔ گزروتے وقت کے ساتھ عروج سے زوال کی داستان شروع ہوئی۔ پہلے ازدواجی زندگی کی ناکامی اور پھر جواں سال بیٹے کی موت نے روحی بانو کو دماغی مرض میں مبتلا کر دیا ۔

وہ لاہور کے علاقے گلبرگ میں اپنے گھر میں اکیلی مقیم تھیں لیکن سال 2016 میں قبضہ مافیا کی جانب سے دھمکیاں ملنے کے بعد حکومت اور ساتھی اداکاروں کے تعاون سے روحی بانو کو فاؤنٹین ہاؤس بھیج دیا گیا

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں